dushwari

تازہ ترین خبر:

علامی دبائو میں پاکستان ،حافظ سعید سمیت کئی تنظیموں کو دہشت گردوں کی فہرست میں کیا شامل

اسلام آباد:13؍فروری2018(فکروخبر/ذرائع)عالمی دباؤ کے چلتے پاکستان نے اپنی زمین پر پنپ رہی دہشت گردی کے خلاف کچھ سخت قدم اٹھائے ہیں۔صدر ممنون حسین نے 'اینٹی ٹیررزم ایکٹ'سے جڑے آرڈیننس کو منظوری دے دی ہے۔اس کے تحت اب پاکستان حکومت کو ان دہشت گرد تنظیموں اور ان سے جڑے لوگوں کے آفس اور اکاؤنٹ بند کرنے ہوں گے جنہیں اقوام متحدہ کی سکیورٹی کونسل (یواین ایس سی) بند کر چکی ہے

واضح ہو کہ اب تک پاکستان ان تنظیموں پر اپنی مرضی کے حساب سے کارروائی کرتا آیا ہےپاکستان کے اخبار 'دا ٹربیون 'کی ایک رپورٹ میں دہشت گردی کے خلاف قانون میں اہم تبدیلی کی جانکاری دی ہے۔افسران کواقوام متحدہ کے ذریعے محدود لوگوں اور دہشت گرد تنظیموں کے خلاف سخت کارروائی کئے جانے ان کے دفتروں اور بینک اکاؤنٹ کو سیل کئے جانے کا حق دیا گیا ہے۔قومی انسداد دہشت گرد اتھارٹی (این اے سی ٹی اے)نے اس نئے قدم کی تصدیق کی ہے۔این اے سی ٹی اےکے مطابق اب وزیر داخلہ، وزیر خزانہ اور خارجہ امور کےوزیرکے ساتھ ساتھ این اے سی ٹی اےکی دہشت گرد فنانسنگ مخالف (سی ایف ٹی )یونٹ اس معاملے پر ایک ساتھ مل کر کام کریگی۔حالانکہ اس تعلق میں راشٹر پتی بھون نے کچھ بھی کہنے سے انکار کر دیا ہے۔اقوام متحدہ کی پابندی شدہ فہرست میں القاعدہ ،تحریک طالبان پاکستان،لشکر جھنگوی،جماعت الدعوہ،فلاح انسانیت فاؤنڈیشن (ایف آئی ایف) ،لشکر طیبہ اور دیگر شامل ہیں۔پاک حکومت نے نئے قانون کے بعد ان تنظیموں کی فنڈنگ پراثر پڑےگا۔

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES