Print this page

امریکہ،برفانی طوفان 24جانیں لے کر تھم گیا،ملک کو ایک ارب ڈالر کے نقصان کا تخمینہ (مزید اہم ترین خبریں )

واشنگٹن۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع) امریکہ میں تباہ کن برفانی طوفان 24افراد کی جان لے کر تھم گیا،ملک کو ایک ارب ڈالر کے نقصان کا ابتدائی تخمینہ لگا لیا گیا،برف ہٹانے کا کام اور امدادی سرگرمیاں شروع، کانگریس میں متعدد مسودہ قانون پر ہونے والی رائے شماری ملتوی ،متاثرہ ریاستوں میں سرکاری دفاتر اور سکول نہ کھل سکے،فضائی سروس بحال کر دی گئی،لوگوں کو کچھ وقت کے لئے گاڑیاں سڑکوں پرنہ لانے کی ہدایت ۔امریکی میڈیا کے مطابق امریکہ میں برفانی طوفان تھم گیا ہے جس کے بعد برف ہٹانے کا کام اور امداددی سرگرمیاں شروع کر دی گئی ہیں۔طوفان کے دوران مختلف واقعات میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد 24 بتائی گئی ہے

جن میں کار حادثات کے علاوہ وہ لوگ بھی شامل ہیں جو برف ہٹاتے ہوئے دل کا دورہ پڑنے سے انتقال کر گئے۔پنسلوینیا میں ایک شخص اپنی کھڑی گاڑی میں دم گھٹنے سے ہلاک ہوا۔ اس کی گاڑی کا انجن اسٹارٹ تھا کہ برف ہٹانے والوں کی زد میں آکر گاڑی پوری طرح برف میں دب گئی اور گاڑی سے خارج ہونے والی کاربن مونوآکسائیڈ کے باعث یہ شخص دم توڑ گیا۔طوفان کے بعد امدادی سرگرمیاں شروع ہونے کے بعد معمولات زندگی کے پوری طرح بحال ہونے میں مزید چند دن لگ سکتے ہیں۔واشنگٹن میں میں زیر زمین ریلوے کے نظام کو محدود پیمانے پر بحال کر دیا گیا ہے جب کہ تینوں ہوائی اڈوں سے فضائی سروس بھی بحال کر دی گئی ہے۔واشنگٹن اور اس کے گرد و نواح میں اسکول بند رہیں گے جب کہ کانگریس میں متعدد مسودہ قانون پر ہونے والی رائے شماری ملتوی کر دی گئی ہے۔نیویارک سے لے کر دیگر خلیجی ریاستوں تک کے میئرز اور گورنرز نے اپنے اپنے شہریوں پر زور دیا ہے کہ وہ فی الحال گاڑیاں چلانے سے گریز کریں تاکہ شاہراہوں اور گلیوں سے برف ہٹانے کا کام مکمل کیا جا سکے اور دیگر ہنگامی امداد کے کارکنوں کو اپنے کام میں رکاوٹ کا سامنا نہ کرنا پڑے۔نیو جرسی میں برفانی طوفان سے سیلابی صورتحال پیدا ہوگئی تھی جہاں پانی رہائشی اور کاروباری عمارتوں میں داخل ہو گیا تھا۔جمعے سے اتوار تک ہونے والی برفباری کے دوران پانچ ریاستوں میں تین فٹ سے زیادہ برف پڑی اور 20 ریاستوں میں ساڑھے آٹھ کروڑ سے زیادہ امریکی اس سے متاثر ہوئے۔سب سے زیادہ برفباری مغربی ورجینیا میں گلینگیری کے علاقے میں ہوئی جہاں 42 انچ برف پڑی۔اس طوفان کی وجہ سے امریکہ کے سب سے گنجان آباد شہر نیویارک اور دارالحکومت واشنگٹن میں زندگی کا پہیہ رک گیا تھا۔نیویارک کے میئر کا کہنا ہے کہ شہر میں 1869 کے بعد یہ شہر پر گرنے والی دوسری سب سے زیادہ برف تھی تاہم اب شہر میں طوفان کی وجہ سے عائد کی گئی سفری پابندیاں اٹھا لی گئی ہیں۔تاہم واشنگٹن ڈی سی اور ورجینیا میں حکام نے عوام سے اب بھی یہی اپیل کی ہے کہ وہ اپنے گھروں میں رہیں تاکہ صفائی کا عمل متاثر نہ ہو۔ریاست نیویارک کے گورنر اینڈریو کیومو نے ڈرائیوروں سے کہا ہے کہ وہ صرف انتہائی ضروری سفر پر ہی نکلیں۔واشنگٹن میں زیرِ زمین ٹرین سروس کا نظام بھی مزید 24 گھنٹے بند رہے گا جبکہ کئی علاقوں میں سکول بھی پیر کو بند رہیں گے۔طوفان کے بعد جمع ہونے والی برف ہٹانے کے دوران کم از کم آٹھ افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ مزید 12 افراد طوفان کے دوران مختلف حادثات میں مارے گئے۔اس برفانی طوفان کے باعث تقریبا سات ہزار پروازیں منسوخ کی گئیں جبکہ پیر کے دن بھی 615 پروازیں اڑان نہیں بھریں گی۔امریکی حکام نے برفانی طوفان کے نتیجے ہونے والے نقصان اور بحالی کے کاموں پر آنے والے اخراجات کا تخمینہ ایک ارب ڈالر تک لگایا گیا ہے ۔


دولتِ اسلامیہ نے پیرس پر حملہ کرنے والوں کی ویڈیو جاری کر دی

پیرس۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع)جہادی سرگرمیوں کی نگرانی کرنے والے ایک گروپ کا کہنا ہے کہ شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ نیگذشتہ برس نومبر میں فرانسیسی دارالحکومت پیرس پر حملوں میں مبینہ مبینہ طور پر ملوث افراد میں سے کچھ کی ویڈیو جاری کی ہے۔اس ویڈیو میں ان مشتبہ حملہ آوروں کو مشرقِ وسطی میں دکھایا گیا ہے جبکہ فرانس کی حکومت نے اس ویڈیو پر تبصرہ کرنے سے انکار کیا ہے۔مانیٹرنگ گروپ نے ویڈیو میں دکھائے جانے والے افراد میں سے نو کے بارے میں کہا ہے کہ ان کی شکلیں مشتبہ حملہ آوروں سے ملتی جلتی ہیں.ویڈیو میں 13 نومبر کو حملوں کا نشانہ بننے والے مقامات کے نام بھی دیے گئے ہیں۔پیرس کے بتاکلان تھیٹر کے علاوہ ریستورانوں اور فٹبال سٹیڈیم کے قریب ہونے والے دھماکوں اور فائرنگ سے 130 افراد ہلاک ہوئے تھے۔یہ ویڈیو خود کو دولتِ اسلامیہ کہنے والے گروپ کے میڈیا چینل کے ذریعے جاری کی گئی ہے۔ویڈیو کا تجزیہ کرنے والے ایک ماہر کا کہنا ہے کہ پیرس حملوں میں مبینہ طور پر ملوث چار حملہ آوروں کو ویڈیو میں قیدیوں کے سر قلم کرتے اور ان پر گولیاں چلاتے دیکھا جا سکتا ہے۔مانیٹرنگ گروپ کا کہنا ہے کہ ویڈیو پیرس پر حملے سے قبل شام کے شہر رقہ میں فلمائی گئی ہے۔ رقہ شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ کا گڑھ ہے۔ویڈیو میں نظر آنے والی تصاویر میں ایک شخص عبدالحمید اباعود سے بھی مشابہت رکھتا ہے جنھیں پیرس میں حملوں کا منصوبہ ساز سمجھا جاتا ہے۔بیلجیئم کے شہر اباعود حملوں کے کچھ دن بعد پیرس کے علاقے ساں ڈنی میں پولیس کے آپریشن کے دوران مارے گئے تھے۔پیرس پر حملہ کرنے والے افراد میں سے نو حملے کے دوران یا پھر اس کے کچھ دن بعد مارے گئے تھے اور خدشہ ہے کہ دو تاحال مفرور ہیں۔حال ہی میں ایک غیر تصدیق شدہ اطلاع سامنے آئی تھی جس کے مطابق مفرور افراد میں سے ایک صالح عبدالسلام نے اپنے وکیل سے رابطہ کیا ہے۔


تائیوان میں سردی سے 50 ہلاکتیں، مشرقی ایشیا میں فلائیٹ شیڈول متاثر،60ہزار سیاح پھنس گئے

تائی پے۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع) مشرقی ایشیا میں غیرمعمولی ٹھنڈ پڑنے سے تائیوان میں 50 افراد کی موت ہو گئی ہے جبکہ جنوبی کوریا میں ہوائی اڈے بند ہو جانے کے باعث 60 ہزار سیاح پھنس گئے ہیں۔تائیوان میں میڈیا کے مطابق ہفتے کے اختتام پر سردی میں غیر معمولی اضافے کے باعث یہ اموات واقع ہوئی ہیں۔تائیوان اور جنوبی کوریا کے علاوہ ہانگ کانگ، جنوبی چین اور جاپان میں بھی سردی میں اضافہ ہوا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق تائیوان میں ہلاک ہونے والے افراد میں زیادہ تر عمر رسیدہ افراد تھے۔تائیوان کے شمالی علاقوں میں درجہ حرارت چار ڈگری سینٹی گریڈ تک پہنچ گیا جو غیر معمولی طور پر کم درجہ حرارت ہے۔تائیوان کے حکام نے لوگوں کو اور خاص طور پر عمر رسیدہ افراد کو متنبہ کیا ہے کہ وہ جتنا ممکن ہو سکے مکانوں ہی میں رہیں اور اپنے آپ کو گرم رکھیں۔دوسری جانب جنوبی کوریا کے جیجو جزیرے کا ہوائی اڈہ بند ہونے کے باعث 500 اندرون ملک اور بیرون ملک پروازیں متاثر ہوئی ہیں۔جیجو جزیرہ اپنے گرم موسم کے حوالے سے مشہور ہے لیکن وہاں پر درجہ حرارت منفی چھ ڈگری سینٹی گریڈ تک گر گیا۔حکام کا کہنا ہے کہ جیجو کا ہوائی اڈہ پیر کی رات کو کھولے جانے کے امکانات ہیں۔ہزاروں سیاح جیجو جزیرے پر پھنس گئے ہیں اور حکام ان کے لیے رہائش اور ٹرانسپورٹ کا بندوبست کرنے میں مصروف ہیں۔ہانگ کانگ میں درجہ حرارت تین ڈگری رہا جو پچھلے 60 سالوں میں کم ترین درجہ حرارت ہے۔چاپان کے وسیع علاقوں میں برفانی طوفان آئے ہیں اور 600 اندرون ملک پروازیں متاثر ہوئی ہیں۔


جنوبی کوریا کے جزیرے جی جو میں برف باری نے32 سالہ ریکارڈ توڈ دیا 5 سو پروازیں منسوخ 

سیول ۔ 25 جنوری (فکروخبر/ذرائع) جنوبی کوریا کے جزیرے جی جو میں برف باری نے32 سالہ ریکارڈ توڈ دیا 5 سو سے زیادہ پروازیں منسوخ کر دی گئی ہیں ۔ذرائع ابلاغ کے مطابق جنوبی کوریا کے سیاحتی مقام اور جزیرے جی جو میں ایک فٹ سے زیادہ برف باری نے تباہی مچادی جس کے باعث نظام زندگی درہم برہم ہو کر رہ گیا۔محکمہ موسمیات کے مطا بق برف باری نے32سالہ ریکارڈ توڈ دیا ہے۔ شدید برف باری اقور تیز ہواوں کے بعد5 سو سے زیادہ پر وازیں منسوخ کر دی گیہ ہیں۔ مسافروں کے بڑی بعداد ائیر پورٹس پر پھنس کر رہ گی ہے۔محکمہ موسمیات کے مطا بق علاقے میں مزید برف باری کا امکان ہے۔


سویڈن ، قتل عام کی دھمکی کے بعد یونیورسٹی ایک روز کے لئے بند

سٹاک ہوم ۔ 25 جنوری (فکروخبر/ذرائع) سویڈن یونیورسٹی میں قتل عام کی دھمکی کے بعد یونیورسٹی ایک روز کے لئے بند کر دی گئی۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق وسطی سویڈن میں واقع اوریبرو یونیورسٹی کے حکام کا کہنا ہے کہ انٹر نیٹ کے زریعے سے ملنے والی قتل کی دھمکی کے بعد یونیورسٹی ایک روز کے لئے بند کر دی گئی ہے۔ حکام کہا کہنا ہے کہ ہم طلبہ، وزٹرز اور عملے کو خطرے میں نہیں ڈالنا چاہتے۔ انکا کہنا ہے کہ دھمکی کے بعد یونیورسٹی پولیس کی مشاورت سے ایک روز کے لئے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ یونیورسٹی میں 17سو طلبہ زیر تعلیم اور12سو ملازمین کام کر رہے ہیں۔


روس پر لگائے جانے والی پابندیاں آئندہ گرمیوں میں اٹھا جا سکتی ہیں

پیرس ۔ 25 جنوری (فکروخبر/ذرائع) فرانس نے اس امید کا اظہار کیا ہے کہ یوکرین میں مبینہ مداخلت کے باعث مغربی ممالک کی جانب سے روس پر لگائے جانے والی پابندیاں آئندہ گرمیوں میں اٹھالی جائیں گی۔ذرائع ابلاغ کے مطابق یہ بات فرانس کے معاشی وزیر ایمینوئل مارکون نے اپنے دوران روس کے دوران کہی۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال طے پانے والے منسک معاہدے کے احترام کرنے کی صورت میں ہم نے روس سے پابندیاں اٹھانے کے قابل ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ آئندہ آنے والے مہینے میں یہ ممکن ہے کہ منسک معاہدے پر عمل درآمد کا حل تلاش کیا جا سکے۔ادھر امریکی وزیر خارجہ جان کیری نے ڈیوس میں اپنے ایک بیان میں کہاتھا کہ معاہدے پر عمل پر درآمد کی صورت میں مغرب کی جانب سے لگائی جانے والی پابندیاں ختم کی جا سکتی ہیں۔


بر اعظم ایشیاء میں برف باری اور سرد ہواؤں کے باعث حادثات اور بیماریوں میں اضافہ

ہانگ کانگ ۔ 25 جنوری (فکروخبر/ذرائع) جاپان اور تائیوان سمیت ایشیاء کے اکثر علاقوں میں برف باری اور سرد ہواؤں کے باعث حادثات اور بیماریوں میں اضافہ سینکڑوں پروازوں کی منسوخی کی وجہ سے ہزاروں مسافر پھنس چکے ہیں۔ذرائع ابلاغ کے مطابق جاپان ،تائیوان اور جنوبی کوریاسمیت بعض علاقوں میں برف باری، لینڈ سلائیڈنگ اور سرد ہواؤں کے وجہ سے ہونے والے حادثات کی وجہ سے بعض ہلاکتوں کی اطلاعات بھی ملی ہیں جبکہ گرم مرطوب ہانگ کانگ میں بھی سخت سردی کی صورتحال ہے۔جاپان میں برف باری اور سرد موسم کی وجہ سے حادثات کے نتیجے میں گزشتہ روز پانچ افراد ہلاک اور سو سے زیادہ زخمی ہوگئے۔ ادھرتھائی لینڈ کا دارالحکومت بنکاک جس کا درجہ حرارت کبھی کبھار 20 ڈگری سینٹی گریڈ سے گرتا ہو گزشتہ روز اس کا درجہ حرارت 16 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔


آسٹریلوی رہنماؤں نے ملک کو جمہوریہ بنانے کی حمایت کردی

سڈنی ۔ 25 جنوری (یو این این) آسٹریلیا کی سات ریاستوں کے رہنماؤں نے ملک کو جمہوریہ بنانے کیلئے برطانوی اقتدار اعلی کے خاتمے کی حمایت کردی۔ذرائع ابلاغ کے مطابق منگل کویوم آسٹریلیا سے ایک روز قبل ملک کی آٹھ میں سے سات ریاستوں کے سیاسی رہنماؤں نے پیر کے روز ایک اعلامیے پر دستخط کیے جس میں سربراہ مملکت سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ ملک کو جمہوریہ کا درجہ دلایا جائے اور اس کی حیثیت کو لندن میں بھی تبدیل کرایا جائے اس بارے میں ملکہ الزبتھ دوم کی حکومت کے ساتھ تعلقات کی خرابی کو بھی خاطر میں نہ لایا جائے۔اعلامیے پر دستخط نہ کرنے والی ریاست مغربی آسٹریلیا کے وزیراعظم کولین بارنٹ کا کہنا تھا کہ وہ اس چیز کے مخالف نہیں تاہم وہ نہیں سمجھتے کہ یہ اس بات کا موزوں وقت ہے۔آسٹریلین ریپلکن موومنٹ کے چیئرمین پیٹر فٹزسمنز نے سرکاری ریڈیو کو بتایا کہ اب تمام آسٹریلوی رہنما مقامی سربراہ ریاست کے حق میں ہیں۔


2020ء تک سالانہ آمدنی میں دو گنا اضافہ کیا جائے گا،زیڈ ٹی ای کارپوریشن

ہانگ کانگ ۔ 25 جنوری (یو این این) چین کی سمارٹ فون ساز کمپنی ’’زیڈ ٹی ای کارپوریشن‘‘ نے کہا ہے کہ 2020ء تک سالانہ آمدنی میں دو گنا اضافہ کیا جائے گا۔ زیڈ ٹی ای کے ترجمان ڈیوڈ ڈائی شو نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ کمپنی کی سالانہ آمدنی 2020ء تک 200 ارب یوآن تک بڑھانے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے جبکہ امریکا میں سمارٹ فون کی فروخت کے حوالے سے تیسری بڑی کمپنی کا درجہ حاصل کرنے کیلئے وہاں سمارٹ فونز کی فروخت میں اضافے کیلئے بھی اقدامات کئے جائیں گے۔ رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال زیڈ ٹی ای کی آمدنی 23.8 فیصد اضافے سے 100.8 ارب یوآن کی ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی جبکہ ابتدائی خالص منافع 43.5 فیصد اضافے سے 3.8 ارب یوآن رہا۔