dushwari

(فکروخبر ) یونائیٹیڈ نیوس نیٹ ورک ریسرچ ڈیسک

سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ نیو ہورائزن کی آمد کے ساتھ ہی نظام شمسی کے نقشے پر بنی نوع انسان کی جدوجہد کی تکمیل درج ہوئی ہے جبکہ اس کو تیسرے زون میں تحقیق کے آغاز کے طور پر بھی یاد رکھا جائے گا۔ناسا کی خلائی گاڑی نیو ہورائزن نے کامیابی سے اپنے سفر کا انتہائی اہم مرحلہ مکمل کر لیا ہے۔ سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ اس کامیاب مشن نے پلوٹو کے بارے میں ہمارے نقطہ نظر کو تبدیل کر دیا ہے،کہ یہ دور کی دنیا میں صرف ایک برف کا گولا ہے جبکہ اس میں مختلف اقسام کی ارضیاتی خصوصیات کا انکشاف ہوا ہے۔

نجم الحسن انصاری

تاریخ گواہ ہے کہ فروغ اسلام کے بعد جب مسلمانوں کی خلافت قائم ہوئی تو خلفاء کی سر پرستی میں مسلم سائنسدانوں نے زندگی کے تمام شعبوں میں ایسے کارہائے گرانمایہ انجام دےئے کہ آج پندرہ سو سال سے زائد عرصہ گزرجانے کے بعد بھی ان کے بنائے گئے مضامین کے ضابطوں اصولوں اور طریقہ کار کو ساری دنیا کے سائنسدانوں نے من و عن ہی درست تسلیم کر لیا ہے اور محو حیرت ہیں کہ عہد وسطی کے مسلم سائنسدا ن آج سے ڈیڑھ ہزار سال قبل اس نتیجہ پر کس طرح پہنچے تھے جبکہ حقیقت تدوین و مطالعہ اور جائزہ کے لئے انہیں سہولتیں بھی انہیں حاصل نہیں تھیں اور نہ ہی آلات مہیا تھے پھر بھی مسلم سائنس دانوں کا یہ کرشمہ سارے عالم اسلام کے لئے اگر عزت و فخر کا سبب ہے تو یورپی ممالک کے لئے قابل تقلید علم جس کی روشنی میں وہ ایجادات و تحقیق کے نئے منازل طے کررہے ہیں ۔

 ریسرچ ڈیسک

گنا پودوں کی سلطنت کا ایک اہم رکن ہے جس کا استعمال بدن میں سکروز کی صورت میں شوگر فراہم کرتا ہے۔ نشوونما پانے کے دوران اس میں گلوکوز اور فرکٹوز موجود ہوتے ہیں۔ گنے کی فصل انتہائی سستی توانائی بخش غذا مہیا کرتی ہے۔ گنے کا تعلق گھاس کے خاندان سے ہے۔ یہ موسمی پودا ہے حالانکہ اس کی جڑیں سارا سال زندہ رہتی ہیں۔ گنا 2.5 سے 4.25 میٹر لمبا ہوتا ہے۔ گنے کا تنا مختلف محیط رکھتا ہے لیکن عام طور پر 2.5 سے 8 سینٹی میٹر تک گول ہوتا ہے۔ تنے پر بہت سی گرہیں ہوتی ہیں جو ہر چند سینٹی میٹر کے بعد بنی ہوتی ہیں۔ گنا ہندوستان کا مقامی پودا ہے۔ یہ بر صغیر میں ویدوں کے دور سے کاشت کیاجا رہا ہے۔

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES