dushwari

ریاست اروناچل پردیش میں صدر راج نافذ کر دیا گیا (مزید اہم ترین خبریں )

اپوزیشن جماعت کانگریس کی جانب سے فیصلہ کی شدید مخالفت 

نئی دہلی ۔ 25 جنوری (فکروخبر/ذرائع) ملک کی سرحدی ریاست اروناچل پردیش میں پیر کو صدر راج نافذ کر دیا گیا ۔ ریاست میں صدر راج کے نفاذ کا فیصلہ وزیر اعظم نریندرمودی کی زیر صدارت مرکزی کابینہ کے خصوصی اجلاس میں کیا گیا ۔ اپوزیشن جماعت کانگریس نے اس فیصلہ کی شدید مخالفت کرتے ہوئے اس کے خلاف عدالت سے رجوع کرنے کا اعلان کر دیا۔ کانگریس نے اس فیصلہ پر وزیر اعظم نریندرمودی کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا اور انہیں سیاسی عدم برداشت کا سرچشمہ قرار دے دیا۔ اروناچل کے وزیر اعلیٰ نابام توئی نے مرکزی حکومت کے فیصلہ کو ناقابل قبول قرار دیا ہے ۔

دہلی کے وزیر اعلیٰ عام آدمی پارٹی کے سربراہ اروندکیچریوال نے مرکزی حکومت کے اس فیصلہ پر شدید صدمہ کا اظہار کیا ہے ۔ واضح رہے کہ گذشتہ سال 16دسمبر کو ارونا چل پردیش کی ریاستی اسمبلی کانگریس کے 16باغی ارکان اور بی جے پی کے 11ارکان اسمبلی نے اسمبلی کی عمارت کے علاوہ ایک اور مقام پر اپنا اجلاس منعقد کر کے ریاستی اسمبلی کے سپیکر نابام ریبیا کے خلاف مواخذے کا مطالبہ کیا تھا جس کے بعد ریاستی حکومت سیاسی بحران کا شکار ہوگئی تھی۔ ریاستی اسمبلی کے سپیکر نے ارکان کے مذکورہ اجلاس کو غیر قانونی اور غیر آئینی قرار دیا تھا۔


شیو سینا کا اردو عربی پر پابندی کا مطالبہ مسلمانوں کو مشتعل کرنے کے منصوبوں کا حصہ:عبدالرحمن شاکر پٹنی

ممبئی۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع )ملک معاشی سست روی سے گذر رہا ہے ۔ایک کروڑ نئے روزگار پیدا کرنے کے وعدے ہوا ہو گئے بے روز گاری بڑھ رہی ہے ۔مہنگائی عروج پر ہے اچھے دن بھی چناوی جملہ ثابت ہو رہا ہے ۔ہمارے وزیر اعظم سب کا ساتھ سب کا وکاس کے نعروں کے ساتھ حکومت میں آئے تھے ۔لیکن اب نہ تو وکاس ہے اور نہ ہی ایک گروہ کے علاوہ کسی کے ساتھ کا دور دور تک پتہ ہے ۔ ان حالات میں بی جے پی کی اتحادی پارٹی شیو سینا کا مطالبہ کہ مدارس میں اردو اور عربی ذریعہ تعلیم پر پابندی عائد کی جائے ۔خلاف آئین ،شر انگیز اور مسلمانوں کو اشتعال دلانے والا تو ہے ہی ساتھ ہی یہ عوام کا ذہن حکومت کی ناکامی سے بھٹکانے کی ایک ناپاک کوشش بھی ہے ۔یہ باتیں ایک پریس اعلامیہ میں کل ہند مجلس اتحادالمسلمین ممبئی کے صدر عبد الرحمن شاکر پٹنی نے کہی ۔انہوں نے آگے کہا کہ بی جے پی اور شیو سینا کے وہ مسلم چہرے کہاں ہیں جو مسلمانوں کی ترقی کا راگ الاپتے ہیں اور ساتھ ہی جن کا دعویٰ ہے کہ مسلمان صرف بی جے پی حکومت میں ہی تری کرسکتے ہیں انہیں مکمل تحفظ کی ضمانت دی جاسکتی ہے ۔جبکہ زمینی صورتحال یہ ہے کہ موجودہ حکومت میں بھی کانگریس کی طرح مسلمانوں کوخوف زدہ کرنے کی منصوبہ بند کوشش جارہی ہے۔ شاکر پٹنی نے شیو سینا کے مسلم چہرہ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اب ان کی زبان کیوں گنگ ہے ؟پچھلے سال ہی انہوں نے کہا تھا کہ وہ مسلمانوں کے مفاد کے لئے ہی شیو سینا سے جڑے ہیں اور جس دن شیو سینا سے مسلمانوں کا مفاد متاثر ہو گا وہ اس سے استعفیٰ دے کر علیحدہ ہو جائیں گے ۔ممبئی صدر مجلس نے بی جے پی کے دو مسلم کارکنوں کو خاص طور سے تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ وہ شیو سینا کے مذکورہ شر انگیز بیان پر اپنی پوزیشن اور پارٹی کا موقف واضح کریں کہ کیا ان کی پارٹی شیو سینا کے بیان سے متفق ہے یا اگر نہیں ہے تو کیا وہ ان کے اس مطالبہ کی مذمت کرتے ہوئے اسے اپنے محاذ سے باہر کا راستہ دکھانے کی جرات کریں گے ۔انہوں نے خصوصی طور پر وزیر اعلیٰ مہاراشٹر اور بی جے پی کے ریاستی ذمہ داروں سے مطالبہ کیا کہ وہ شیو سینا کے مدارس کے ذریعہ تعلیم کو عربی اردو سے بدل کر ہندی انگریزی کرنے کے غیر دستوری مطالبہ پر اپنی پوزیشن واضح کریں ۔اگر وہ شیو سینا سے علیحدہ ہونے کا اعلان نہیں کرتے تو یہ سمجھا جائے گا کہ بی جے پی بھی شیو سینا کے مذکورہ غیر دستوری اور شر انگیز بیان سے متفق ہے اور یہ صرف شیو سینا کا ہی نہیں بلکہ بی جے پی کے بھی عین منشا کے مطابق ہے ۔ 


پدم شری سیدحسن کے انتقال پرایم پی مولانااسرارالحق قاسمی کا اظہارتعزیت

کشن گنج۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع )کشن گنج کی معروف عصری تعلیم گاہ انسان اسکول کے بانی و پدم شری اعزازیافتہ سیدحسن کاآج کشن گنج میں انتقال ہوگیا۔ان کی وفات پرتعزیت کا اظہارکرتے ہوئے معروف عالم دین اور کشن گنج کے ممبرپارلیمنٹ مولانااسرارالحق قاسمی نے کہاکہ سیدحسن صاحب نے کشن گنج میں تعلیم کو فروغ دینے کے لیے قابلِ قدرکوششیں کیں اور اس علاقے پر ان کے بڑے احسانات ہیں جنھیں فراموش نہیں کیاجاسکتا۔مولانانے کہاکہ انسان اسکول کے ذریعے مرحوم سید حسن صاحب نے کشن گنج کے خطے میں ایک تعلیمی انقلاب برپاکیااوراس کے ذریعے سے یہاں کے مسلمانوں کوتعلیمی میدان میں آگے بڑھنے کا سنہراموقع حاصل ہوا۔کشن گنج کے ایم پی نے کہاکہ سیدحسن صاحب کی تعلیمی خدمات کے اعتراف میں حکومتِ ہندنے انھیں ہندوستان کے موقر شہری اعزازپدم شری ایوارڈسے بھی نوازاتھا۔انھوں نے کہاکہ ذاتی طورپرمجھ سے ان کے بہت ہی مخلصانہ تعلقات تھے ،وہ ایک مخلص ،متواضع اوربااخلاق انسان بھی تھے،مختلف معاملوں میں ہم نے ایک دوسرے سے تبادلۂ خیال اور مشورے کیے اورہم نے انھیں ہمیشہ کشن گنج کے علاقے کے پسماندہ مسلمانوں کی تعلیمی و سماجی ترقی کے لیے بہت ہی مخلص پایا،انھوں نے کہاکہ ان کی وفات سے کشن گنج ایک مخلص تعلیمی رہنماسے محروم ہوگیاہے اوریہ خطہ بھر کے لیے ایک عظیم بڑاخسارہ ہے۔واضح رہے کہ انسان اسکول کے بانی سربراہ پدم شری جناب سیدحسن کاآج ہی کشن گنج میں انتقال ہواہے،ان کی عمر91سال تھی ،پسماندگان میں اہلیہ کے علاوہ تین بیٹے اورایک بیٹی ہیں،ان کی نمازجنازہ وتدفین آج دوپہردوبجے انسان اسکول کے کیمپس میں عمل میں آئے گی۔ ان کے انتقال کی اطلاع ملتے ہی کشن کے گنج کے ایم پی مولانا اسرارالحق قاسمی نے ان کے صاحبزادے سیدشفاء احمدسے فون کرکے اظہارِتعزیت کیااور کہاکہ ہم اہلِ خانہ کے غم میں شریک ہیں،انھوں نے اپنی سرپرستی میں چلنے والے اداروں میں مرحوم کے لیے ایصالِ ثواب کی بھی ہدایت دی۔دوسری جانب وفات کی خبر ملتے ہی ایم پی کے نمایندے پروفیسر شفیع احمدنے مرحوم کے اہلِ خانہ سے ملاقات کرکے تعزیت کا اظہارکیاہے۔


پاکستان پر اپنی سرزمین سے شدت پسند نیٹ ورکس کو ختم کرنے پر سنجیدگی کا مظاہرہ کرے ٗ امریکی صدر اوباما 

نئی دہلی۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع )امریکی صدر باراک اوباما نے کہا ہے کہ پاکستان پر اپنی سرزمین سے شدت پسند نیٹ ورکس کو ختم کرنے پر سنجیدگی کا مظاہرہ کرے ٗشدت پسند مذہبی گروہوں کے خاتمے کیلئے مزید اقدامات کر نا ہونگے ٗ خطے میں دہشتگردوں کیلئے کوئی جگہ نہیں ہونی چاہیے ۔ بھارتی میڈیا کو دیئے گئے انٹرویو میں امریکی صدر نے کہا کہ شدت پسندوں کے خلاف کارروائی کی پالیسی درست ہے تاہم پاکستان کو مزید موثر اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے دہشت گردی کے خلاف پاکستانی سیکیورٹی فورسز کی حالیہ کارروائیوں کی تعریف کی تاہم انہوں نے کہاکہ شدت پسند مذہبی گروہوں کے خاتمے کیلئے مزید اقدامات کرنا ہوں گے۔امریکی صدر اوباما نے کہا کہ پاکستان کا اس بات کا اظہار کرنا ہوگا کہ وہ دہشت گرد نیٹ ورکس کو ختم کرنے کے حوالے سے سنجیدہ ہے اس خطے سمیت دنیا بھر میں دہشت گردوں کے لیے کوئی جگہ نہیں ہونی چاہیے اور انہیں انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔امریکی صدر نے کہا کہ پشاور حملے کے بعد پاکستان نے متعدد شدت پسند گروپوں کے خلاف کارروائی کی اور صحیح پالیسی ہے تاہم اس کے باوجود پاکستان میں اب بھی دہشت گرد حملے ہورہے ہیں۔براک اوباما نے کہا کہ پاکستانی قیادت یہ سمجھ چکی ہے کہ خطے میں عدم استحکام خود پاکستان کی سلامتی کیلئے بھی خطرہ ہے اور پاکستان کی شدت پسندوں کے خلاف کارروائی کی پالیسی درست ہے وہ ایک صحیح پالیسی ہے۔ پشاور کے آرمی سکول پر حملے کے بعد سے ہم نے دیکھا ہے کہ پاکستان نے کئی مخصوص گروہوں کے خلاف کارروائیاں کی ہیں اور ساتھ ہی ہم نے پاکستان میں مسلسل دہشت گردی کے واقعات بھی دیکھے ہیں جیسے کہ حال ہی میں شمال مغربی پاکستان میں یونیورسٹی پر حملہ ہوا۔براک اوباما نے کہا کہ پاکستان کے پاس موقع ہے کہ دکھائے کہ وہ دہشت گردوں کے نیٹ ورکس کا قلع قمع کرنے اور غیر قانونی قرار دینے میں سنجیدہ ہے انہوں نے کہاکہ اس خطے (جنوبی ایشیا) اور دنیا بھر میں دہشت گردوں کی محفوظ پناہ گاہوں کو بالکل برداشت نہیں کیا جانا چاہیے اور دہشت گردوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانا چاہیے۔


داعش کی حامی 29ویب سائٹس بند کر دیں 

نئی دہلی ۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع ) حکومت ہند نے داعش کی حامی 29ویب سائٹس بند کر دیں ۔ذرائع ابلاغ کے مطابق بھارت کی 10سے 12ریاستوں میں داعش کی اثرو رسوخ کے شواہد ملے ہیں جن میں ریاست مہاراشٹر سرفہرست ہے ۔ اے ٹی ایس کے سربراہ ویوک بھنسا لکر کے مطابق ان ریاستوں کے نوجوانوں کو آن لائن پلیٹ فارمز کے ذریعے انتہا پسندی کی طرف راغب کیا جا رہا ہے صورتحال میں اے ٹی ایس داعش کے پروپیگنڈے کو ناکام بنانے کیلئے اپنی ویب سائٹ کے اجراء پربھی غور کر رہی ہے ۔ اطلاعات کے مطابق حال ہی میں حراست میں لئے گئے ایک ملزم سافٹ ویئر انجینئر مدبر شیخ نے داعش کے ساتھ رابطوں اور اس تنظیم میں شمولیت کیلئے نوجوانوں سے رابطوں کا اعتراف کیا۔


صدرمشاورت کے صلاح کاراور ایکزیکیٹیو سکریٹری کا تقرر

نئی دہلی۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع)آل انڈیا مسلم مجلس مشاورت کے صدر جناب نوید حامد نے مشاورت کی میقات جنوری ۲۰۱۶تا دسمبر ۲۰۱۷ کے لئے آئین کی روشنی میں جناب سید شہاب الدین صاحب، سابق ممبر پارلیمنٹ و سابق صدر مشاورت کو صلاح کاربرائے صدر مشاورت اور جناب عاکف احمد کو ایکزیکیٹیو سکریٹری نامزد کیا ہے۔ انہوں نے مرکزی مجلس عاملہ کے لئے مزید پروفیسر ہمایوں مراد، علی گڑھ ، جناب عبدالعزیز، کولکتہ ،جناب اعجاز مقبول ، ایڈوکیٹ سپریم کورٹ ، نوئیڈا، ڈاکٹر عزیر احمد قاسمی جنرل سکریٹری ، مرکزی جمعیت علماء ہند اور جناب یوسف حبیب ، الہ اباد کو خصوصی مدعوئین نامزد کیا ہے۔یہ اطلاع جناب مجتبیٰ فاروق ، سکریٹری جنرل نے پریس کو جاری ایک اعلانیہ میں دی ہے۔ 


اشتعال انگیز تقریر کرنے والے رہنماوں پر روک لگائیں وزیر اعظم

مومن انصار سبھا کے وفد سے ملاقات کے دوران ہاشم انصاری کا مطالبہ

لکھنو۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع) مومن انصار سبھا کے ایک وفد نے جمعہ کو بابری مسجدکے فریق محمد ہاشم انصاری سے ان کے فیض آباد واقع مکان پر ملاقات کی۔ اس دوران تنظیم کے نوتشکیل مومن انصار ڈاکٹر سبھا کے ریاستی صدر ڈاکٹر التمش حسین اور جنرل سکریٹری ڈاکٹر آصف کلام نے مسٹر انصاری کی صحت کی جانچ کر کے سیل کا کام کاج شروع کیا۔ سیل کے عہدیدداروں نے مسٹر انصاری سے دعائیں لیں۔ تنظیم کے صدر محمد اکرم انصاری نے بتایا کہ اس دوران مسٹر انصاری سے مسلمانوں سے متعلق کئی موضوع پر گفتگو کی۔ انہوں نے بتایا کہ مسٹر انصاری نے وزیر اعظم نریندر مودی سے بی جے پی کے اراکین پارلیمنٹ اور اراکین اسمبلی سے اشتعال انگیز بیانات پر روک لگانے کامطالبہ کیا۔ مسٹر انصاری نے کہاکہ وزیر اعظم بابا صاحب ڈاکٹر بھیم راو امبیڈکر اور دلتوں کی بات کرتے ہیں تو پسماندہ مسلمانوں کو ریزرویشن دے کر ان کا حق دلائیں۔ہاشم انصاری نے کہاکہ بابا صاحب نے آئین میں پسماندہ مسلمانوں کو اختیارات دیئے تھے۔ انہوں نے کہا کہٓج ہر طرح کی دستکاری سے وابستہ مسلمان بہت برے دور سے گزر رہا ہے۔ ایکسپورٹ پر روک لگنے سے بنکروں و دستکاروں کا تیار مال باہر نہیں جا پا رہا ہے جس سے بنکر اور دستکار بھکمری کی کگار پر پہنچ گئے ہیں۔ انہوں نے ایکسپورٹ پر لگی روک فوراً ہٹانے کا مطالبہ کیا۔ وفد میں خصوصی طور سے اکرام انصاری، رئیس احمد، حافظ شاہ عالم، محمد شکیل سمیت دیگر افراد شریک تھے۔ 


ٹرینوں کے تاخیر سے چلنے کا سلسلہ جاری

لکھنو۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع) کہرے کی وجہ سے ٹرینوں کے تاخیر سے چلنے کا سلسلہ جاری ہے۔ جمعہ کو کاشی وشو ناتھ سمیت درجنوں160ٹرینیں160اپنے مقررہ وقت سے گھنٹوں تاخیر سے چلیں اس کی وجہ سے مسافروں کو کافی پریشانیوں کا سامناکرناپڑا۔ چنڈی گڑھ جانے والی بیگم پورا، گورکھپور انٹر سٹی سمیت تقریباً ایک درجن ٹرینیں تاخیر سے چار باغ پہنچیں۔ کہرے کی وجہ سے دہلی جانے والی فیض آباد دہلی کیفیات ایکسپریس سمیت ممبئی جانے والی گورکھپور ایل ٹی ٹی، لکھنو میل، لکھنو برونی اور چھپرا متھرا ایکسپریس بھی تاخیر سے چارباغ پہنچی۔اس کے علاوہ دو ن ایکسپریس، اودھ آسام ، کسان ایکسپریس ، آگرہ انٹر سٹی ،وارانسی انٹر سٹی، فرکا ایکسپریس، ہاو ڑا امرتسر، گوالیر برونی، لکھنو یشونت پورایکسپریس ، اکال تخت کے علاوہ بریلی ایکسپریس، سیالدہ ، کئی پسنجر اور میمو ٹرینیں160کہرے سے متاثر ہوکر اپنے مقررہ وقت سے ایک سے دو گھنٹے کی تاخیر سے چارباغ پہنچیں۔


جہیز کی بھیٹ چڑھیں ۲ دوشیزائیں 

کوشامبی۔25جنوری(فکروخبر/ذرائع) ضلع کے کوشامبی تھانہ علاقے کے تحت جگراج پور گاؤں میں ایک نئی شادی شدہ کی مشتبہ حالت میں موت ہوگئی ہے ۔ حادثہ کی اطلاع ملتے ہی اس کے مائیکے کے لوگ موقع پر پہنچ گئے اور انہوں نے سسروال والوں کے اوپر جہیز قتل کا الزام لگایا ہے متوفیہ خاتون کے سسرال کے لوگوں نے متوفیہ کے پھانسی لگاکر خودکشی کی بات کہی ہے ۔ جائے وقوع پر علاقائی پولیس اورسی او منجھن پور پہنچ چکے تھے پولیس افسران کا کہنا ہے کہ ابھی اس بارے میں کسی بھی فریق سے کسی بھی طرح کی کوئی تحریر نہیں ملی ہے ۔ تحریر ملتے ہی آگے کی کارروائی کی جائے گی ۔ وہیں دوسری جانب بنجھن پور تھانہ علاقے کے تحت چکنارہ گاؤں میں جہیز کو لیکر خاتون کا جہیز قتل کا دوسرا معاملہ پیش آیا اور جائے وقوع پر پولیس پہنچ چکی تھی ۔ خبر لکھے جانے تک کوئی بھی قانونی کارروائی نہیں ہوئی تھی

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES