dushwari

نازش ہماقاسمی 

رمضان المبارک کا مہینہ جس آب و تاب کے ساتھ شروع ہوا تھا اسی شان و شوکت کے ساتھ ہم تمام کو داغ مفارقت دے گیا ہے، اللہ ہی بہتر جانتا ہے کہ ہم نے رمضان المبارک کی مقدس ساعتوں کا صحیح استعمال کیا ہے یانہیں ، ہم نے کیا کھویا کیا پایا ہے، اس کی برکتوں سے کتنا فیضیاب ہوئے، ابر رحمت سے کتنا استفادہ کرسکے، کیونکہ ہم میں سے بے شمار افراد ایسے ہیں. جنہیں شاید آئندہ رمضان زندگی میں میسر نہ ہو لیکن جن حضرات کو یہ رمضان میسر ہوا ہے کیا انہوں نے اس کی قدر کی ہے،

عبدالعزیز 

ملک میں نریندر مودی کے برسر اقتدار آنے کے بعد مسلمانوں اور دلتوں پر آئے دن خونیں واقعات رونما ہورہے ہیں جو رکنے کا نام نہیں لے رہے ہیں ۔ کسی نہ کسی شہر یا قریہ میں جبر و ظلم کا واقعہ ہر دوسرے تیسرے دن ہوجاتا ہے۔ اس سے ملک بھر میں خوف و ہراس میں اضافہ ہوتا جاتا ہے۔ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ ملک میں حکومت یا قانون نام کی کوئی چیز نہیں ہے۔ جنگل راج ہے اور راج کو چلانے والے رام راج کا نام لے رہے ہیں ۔

وصیل خان 

ملک کی موجودہ صورتحال جتنی نازک اور دھماکہ خیز ہوتی جارہی ہے اسے دیکھ کرکوئی بھی سیکولر اور جمہوریت پسند انسان صرف اور صرف تشویش میں ہی مبتلا ہوسکتا ہے۔ عجیب بات ہے کہ حالات جس قدر خراب ہوتے جارہے ہیں عام لوگوں کی بے حسی تو جانے دیجئے خودسیکولر ذہن کے افرادپر بھی بے حسی اور خوف کے سائے بڑھتے جارہے ہیں ۔ملک کی پارلیمانی سیاست سے لے کر ریاستی سطح تک جس طرح غیر جمہوری انداز کی حکمرانی کا ماحول بنایا جارہا ہے

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES