dushwari

تازہ ترین خبر:

غوث سیوانی

آج کل پرنٹ میڈیا سے الیکٹرانک میڈیا تک ایک ہی بحث چھائی ہوئی ہے کہ زانی کو کون سی سخت سزا دی جائے کہ سماج میں پھر کوئی اس گھناؤنے جرم کا ارتکاب نہ کرے۔ کوئی کہتاہے اسے پھانسی دے دی جائے ‘کوئی کہتا ہے تاعمر جیل کی سلاخوں کے پیچھے ڈال دیاجائے‘ کوئی کہتا ہے اسے سنگسار کردیاجائے‘ توکوئی کہتا ہے کہ اسے خصّی کردیا جائے۔ ہر کوئی اپنی عقل وشعور کے مطابق اسے سخت سزا دینے کی بات کہہ رہا ہے۔ حالانکہ باوجود اس کے شک ہے کہ زنا بالجبر کی وارداتیں رک پائیں۔ یہ بحث تب شروع ہوئی‘ جب میڈیامیں ایک ظالمانہ قسم کی زنا کی واردات سرخیوں میں آئی۔ خبر یہ تھی کہ ایک چلتی ہوئی اسکول بس میں چند لوگوں نے نہ صرف ایک لڑکی کی آبرو ریزی کی‘ بلکہ اسے بری طرح سے مارا پیٹا۔ اس کی آنتوں کو کھینچ کر باہر نکالا‘ تاکہ ثبوت مٹ جائے‘پھر اس برہنہ لڑکی کو سرد رات میں چلتی ہوئی بس سے ایک سنسان مقام پر پھینک کر فرار ہوگئے۔

مولانا خالد سیف اﷲ رحمانی 

اللہ تعالیٰ نے دنیا میں جتنی چیزیں پیدا فرمائی ہیں عا م طو رپر ان میں افراط و تفریط انسان کے لئے ناگوار خاطر اوردشوار ہوتی ہے ۔ یہاں تک کے انسان کیلئے مفید ترین چیز بھی اگر حد اعتدال سے بڑھ جائے یا حد ضرورت سے کم ہو جائے تو انسان کے لئے رحمت کے بجائے زحمت اور انعام خداوندی کے بجائے عذاب آسمانی بن جاتی ہے ۔ ہوا انسان کے لئے کتنی بڑی ضرورت ہے ؟ لیکن جب آندھیاں چلتی ہیں تو یہی حیات بخش ہوا کتنی انسانی آبادیوں کو تاخت و تاراج کر کے رکھ دیتی ہے۔

عبدالعزیز

آر ایس ایس کے سنچالک موہن بھاگوت نے بہار کے مظفر پور ضلع میں آر ایس ایس کے کارکنوں کو خطاب کرتے ہوئے کہاکہ سنگھ سیوک (رضاکار) ہندستانی فوجی جوانوں سے زیادہ قابل اور لائق ہیں۔ ہندستانی فوج کو سرحد پر جنگ لڑنے کیلئے تیار ہونے میں چھ ماہ کی مدت درکار ہوسکتی ہے جبکہ سنگھ سیوک دو تین دنوں میں تیار ہوسکتے ہیں بشرطیکہ حکومت کی اجازت ہو۔ موہن بھاگوت نے کوئی نئی اور حیرت میں ڈال دینے والی بات نہیں کہی ہے۔

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES