dushwari

محمداحمد خان،بنگلور

حق و انصاف کے لیے لڑائی دنیا میں ہر دور میں ہوتی رہی ہے اور یہ تا ابد چلتی رہے گی۔حق و انصاف کے لیے لڑنے والوں کو کسی بیرونی طاقت سے نہ کبھی حوصلہ ملا ہے اور نہ ہی انھوں نے کبھی اس قسم کی طاقتوں پر انحصار کیا ہے۔حق و انصاف کے لیے لڑنے والوں کے اندر ہی ایک پاور اسٹیشن ہوا کرتا ہے جو انھیں ہر طاقت ور جابر کے آگے سر اٹھا کر بات کرنے کا حوصلہ اور ہمت عطا کرتا ہے ۔یہ وہ پہلی بات ہے جو میں آپ کے سامنے عرض کرنا چاہ رہا تھا اور بھی بہت سی باتیں ہیں جو میں آپ سے کرنے کا خواہشمند ہوں ۔

ڈاکٹر مظفر حسین غزالی

بارش زندگی کی علامت ہے ،اس کی آمدپر خوشی کااحساس ہوتاہے، لڑکیاں اورعورتیں اس موسم میں جھولاجھولتی اورپکوان بناتی ہیں ،گی ملہارگائے جاتے ہیں،بارش سے کھیتی میں رونق آجاتی ہے ، پیڑپودے ہرے بھرے ہوجاتے ہیں۔ اس کاسب سے زیادہ انتظارکسانوں کورہتاہے ،کبھی کھیتی کادارومدار بارش پرتھا ،سارے ذرائع ہونے کے باوجوداب بھی بارش کھیتی کے لئے ضروری ہے ۔ دھان کی فصل بارش والے علاقوں میں اچھی ہوتی ہے ۔پچھلے کئی سالوں سے مانسون کی خبرسے ایک ان چاہاڈرستانے لگاہے ،

 محمد عارف انصاری 

برما جس کا نیا نام مینمار ہے، جنوبی اشیا میں واقع 14 صوبوں پر مشتمل اور 7 کروڑ سے زائدآبادی والا ملک ہے جہاں بودھ مذہب ماننے والوں کی اکثریت ہے۔ یہاں تقریباً89فیصدبودھ، 4 فیصد مسلمان ، 4 فیصد عیسائی، 1 فیصد ہندو اور 2 فیصد دوسری قومیں آباد ہیں۔برما کا ایک بڑا صوبہ" اراکان " ہے جواپنے رقبے کے اعتبار سے پانچ ہزار آٹھ سو مربع کلومیٹر پر مشتمل ہے ۔’’اراکان‘‘جسے اب رکھین(راخائن)Rakhine کہاجاتا ہے ،ماضی میں ایک خود مختار آزاد اسلامی ریاست تھی جہاں مسلمان اکثریت میں ہیں۔

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES