Live Madinah

makkah1

dushwari

سعودی عرب۔18مئی(فکروخبر/ذرائع)امریکی حکومت کے ایک اعلیٰ عہدیدار نے کہا ہے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ اپنے دورہ سعودی عرب کے دوران خلیجی ممالک پر زور دیں گے کہ وہ شمالی اوقیانوس کے فوجی اتحادی نیٹو کی طرز پر مشرق وسطیٰ میں عرب نیٹو فورس تشکیل دیں۔العربیہ  کے مطابق امریکی حکام کا کہنا ہے کہ اپنے دورہ سعودی عرب کے دوران صدر ٹرمپ دہشت گردی اور انتہا پسندی سے نمٹنے کے لیے نئے سیکیورٹی ڈھانچے اور لائحہ عمل پر توجہ مرکوز رکھیں گے۔ صدر کے دورے کا مقصد عرب اتحادیوں کو ایران کی طرف سے درپیش خطرات کے تدارک اور علاقائی سلامتی کے مسائل کے حل کے لیے جامع منصوبہ پیش کرنا ہے۔صدر ٹرمپ سعودی عرب کے تاریخی دورے کے موقع پر عرب اور اسلامی ملکوں کی قیادت اور سعودی فرمانروا شاہ سلمان سے بھی ملاقات کریں گے۔ صدر ٹرمپ دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خلاف اپنے پلان سے آگاہ کریں گے۔امریکی ویژن کے مطابق سعودی عرب واشنگٹن کا قابل بھروسہ حلیف اور دوست ہے۔ سعودی عرب پر بھاری سفارتی اور مذہبی ذمہ داریاں بھی عاید ہوتی ہیں۔

انقرہ ۔11مئی(فکروخبر/ذرائع)ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے امریکا سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ شامی کرد جنگجوؤں کو مسلح کرنے کا فیصلہ فوری طور پر واپس لے۔ترک صدر نے اس امید کا اظہار کیا ہے کہ  اس غلطی کو فوری طور پر ٹھیک کردیا جائے گا۔انھوں نے کہا کہ وہ امریکی صدر دونلڈ ٹرمپ سے 16مئی کو اپنی ملاقات میں اس معاملے پر بات کریں گے اور انھیں ترکی کی تشویش سے آگاہ کریں گے۔انھوں نے یہ بیان امریکی صدر کی جانب سے کرد پیپلز پروٹیکش یونٹس (وائی پی جی) کو داعش کے خلاف لڑائی کے لیے اسلحہ مہیا کرنے کی منظوری کے بعد جاری کیا ہے۔ترکی شامی کردوں بھی کو ترک کرد باغیوں کی جماعت کردستان ورکرز پارٹی کا دوسرا چہرہ قراردیتا ہے اور اس نے انھیں دہشت گرد قرار دے رکھا ہے۔صدر رجب طیب ایردوآن نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے نیوز کانفرنس میں کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ ترکی کے اتحادی دہشت گرد تنظیم کے بجائے انقرہ کا ساتھ دیں۔

ایران کی سعودی عرب اور پاکستان کو دھمکیاں قابل مذمت اور افسوسناک ہیں: پاکستانی عالم

پاکستان:۔10مئی(فکروخبر/ذرائع)پاکستان علماء کونسل کے سربراہ طاہر محمود اشرفی نے ایران کی جانب سے سعودی عرب اور پاکستان کے خلاف حالیہ دھمکی آمیز بیانات کو قابل مذمت اور قابل افسوس قرار دیا ہے۔انھوں نے کہا ہے کہ اسلامی دنیا ایران کو سعودی عرب اور پاکستان کی سلامتی کونقصان پہنچانے کی اجازت نہیں دے گی۔انھوں نے ایران کی مسلح افواج کے سربراہ محمد حسین باقری کے پاکستان کی سرزمین میں فوجی مداخلت کے دھمکی آمیز بیان کے ردعمل میں کہا ہے کہ پاکستان ہمیشہ سے خطے میں ضبط وتحمل اور دانش مندی سے امن کے لیے کوشاں رہا ہے لیکن اس کے خلاف ایرانی قیادت کے حالیہ بیانات کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا۔انھوں نے ایک بیان میں واضح کیا ہے کہ پاکستان شام یا عراق نہیں ہے۔ایران کا بھارت اور افغانستان کے ساتھ گٹھ جوڑ پاکستان کو نقصان نہیں پہنچا سکتا۔حافظ طاہر محمود اشرفی نے پاکستانی حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ افغانستان ، ایران اور بھارت کی جانب سے گذشتہ دو ہفتے کے دوران میں جارحانہ کارروائیوں اور بیانات کے حوالے سے اقوام متحدہ ،عالمی برادری اور اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی ) سے رجوع کرے۔

الہ آباد۔09مئی (فکروخبر/ذرائع) الہ آباد ہائی کورٹ نے مسلم شوہر کی طرف سے بیوی کو تین طلاق دئے جانے کے بعد درج جہیز مظالم کے مقدمے کی سماعت کرتے ہوئے تین طلاق اور فتوے پر اہم تبصرہ کیا ہے۔ ہائی کورٹ نے کہا ہے کہ کوئی بھی پرسنل لاء آئین سے اوپر نہیں ہے۔ ہائی کورٹ نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پرسنل لاء کے نام پر مسلم خواتین سمیت تمام شہریوں کو حاصل آرٹیکل 14، 15 اور 21 کے اصل حقوق کی خلاف ورزی نہیں کی جا سکتی ہے۔ کورٹ نے کہا کہ جس معاشرے میں خواتین کا احترام نہیں ہوتا ہے، اسے مہذب معاشرہ نہیں کہا جا سکتا۔ کورٹ نے یہ بھی کہا ہے کہ جنس کی بنیاد پر بھی اصل اور انسانی حقوق کی خلاف ورزی نہیں کی جا سکتی۔کورٹ نے کہا کہ کوئی بھی مسلم شوہر ایسے طریقے سے طلاق نہیں دے سکتا ہے، جس سے مساوات اور زندگی کے بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہوتی ہو۔ ہائی کورٹ نے کہا ہے کہ کوئی بھی پرسنل لاء آئین کے دائرے میں ہی لاگو ہو سکتا ہے۔

مصر:09مئی (فکروخبر/ذرائع)مصر کی کالعدم مذہبی سیاسی جماعت اخوان المسلمون کے ایک جلا وطن رہ نما محمود عزت نے ایک نئی دستاویز شائع کی ہے اس کے مطابق اس قدیم جماعت نے ملک میں ایک سیاسی قوت تسلیم کیے جانے کی صورت میں ڈاکٹر محمد مرسی کے اقتدار کی بحالی کی شرط سے دستبرداد ہونے کا فیصلہ کرلیا تھا۔محمود عز ت کا تعلق اخوان کے ایک مقتول رہ نما محمود کمال کے دھڑے سے ہے۔ محمود کمال مصری پولیس کے ساتھ ایک مبینہ جھڑپ میں مارے گئے تھے۔اس دستاویز کا عنوان  مطابقت کے سمجھوتے سے متعلق پیغام  تھا۔متعلقہ فریقوں نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ یہ دستاویز طویل مذاکرات کے نتیجے میں معرض وجود میں آئی تھی۔تب اس کو اخوان المسلمون کی قیادت کو بھیجا گیا تھا اور اس نے داخلی اور خارجی طور پر اس سے اتفاق کیا تھا اور اس کو اختیار کر لیا تھا۔اخوان کی قیادت نے یہ فیصلہ جماعت کے لیے متعدد فوائد وثمرات کے حصول کے لیے کیا تھا۔

اسلام آباد ۔ 08 مئی (فکروخبر/ذرائع) پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے ضلع چمن کے سرحدی علاقے میں افغان فورسز کے بلااشتعال حملے کے بعد سے دونوں ملکوں کے درمیان نئی کشیدگی پیدا ہو گئی ہے اور صوبہ بلوچستان میں فر نٹئیر کور ( ایف سی ) کے انسپکٹر جنرل ،میجر جنرل ندیم انجم پاکستانی فورسز کی جوابی فائرنگ سے افغان سکیورٹی فورسز کے پچاس اہلکاروں کی ہلاکت کم سے کم ایک سو کے زخمی ہونے کی اطلاع دی ہے۔پاکستانی فورسز نے چمن کے سرحدی علاقے میں افغان فورسز کی دو روز قبل بلا اشتعال فائرنگ کے بعد یہ جوابی کارروائی کی ہے۔تاہم میجر جنرل ندیم تاج نے ان ہلاکتوں پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم ان پر خوش نہیں ہے کیونکہ وہ بھی ہمارے مسلم بھائی ہیں۔ایف سی کے آئی جی نے ضلع چمن کے سرحدی دیہات پر افغان فورسز کے حالیہ حملے کے بارے میں اتوار کے روز صحافیوں کو بریفنگ دی ہے۔

بغداد -۔07مئی(فکروخبر/ذرائع)عراقی سیکیورٹی فورسز نے اتوار کی صبح داعش کے مسلح جنگجوؤں کی جانب سے کرکوک کے مغربی علاقے میں "کیوان" فوجی اڈے پر حملہ ناکام بنا دیا۔ خودکش بمباروں کے ذریعے کیا جانے والا حملہ دونوں جانب سے ہونے والی مسلح جھڑپوں کی وجہ سے ناکام بنایا گیا۔کرکوک پولیس ذرائع نے بتایا کہ داعش سے تعلق رکھنے والے چھ خودکش بمباروں نے اتوار کو علی الصباح تین بجے کیوان بیس داخلے کی کوشش کی، تاہم سیکیورٹی فورسز نے اس حملے کو ناکام بنا دیا۔ عراقی سیکیورٹی اہلکاروں کی فائرنگ سے تین خودکش بمبار ہلاک ہوئے۔انہی ذرائع کا مزید کہنا تھا دو خودکش بمباروں نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا جس کے نتیجے میں البیش مرکہ کا ایک فوجی ہلاک ہوا۔ خودکش بمباروں کو بیس میں داخلے سے روکنے کے لئے تین گھنٹے تک لڑائی ہوتی رہی۔ذرائع نے بتایا کہ حملے کی جگہ پر مزید فوجی کمک ارسال کر دی گئی ہے اور اب صورتحال قابو میں بتائی جاتی ہے

شام۔6مئی(فکروخبر/ذرائع)شام میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں مانیٹر کرنے والی آبزرویٹری کا کہنا ہے کہ بشار الاسد حکومت نے حمص اور حماہ کے مضافات میں محفوظ علاقے بنانے سے متعلق معاہدے کے چند ہی گھنٹوں بعد اس کی خلاف ورزی کا ارتکاب کیا ہے۔روسی وزارت دفاع کے مطابق معاہدہ پر عمل درآمد نصف شب ہونا تھا۔ جن علاقوں کو محفوظ قرار دیا گیا ہے ان میں ادلب گورنری سمیت اللاذقیہ، حلب اور حماہ شامل ہیں۔وزارت کے مطابق روسی لڑاکا طیاروں نے شامی میں محفوظ زون قرار دیئے جانے والے علاقوں کی فضائی حدود میں یکم مئی سے اپنی پروازیں روک رکھی ہیں۔ سیف زونز سے متعلق معاہدہ اقوام متحدہ، امریکا اور سعودی عرب کی حمایت سے طے پایا ہے، جس کے بعد اس پر عمل درآمد کی امید پیدا ہو گئی ہے۔

رام الله :۔03مئی(فکروخبر/ذرائع)اسرائیلی فوج کی جانب سے بیت المقدس کے شمال میں "ایک فلسطینی نوجوان کے ہلاک" کر دیے جانے کا اعلان کیا گیا جس نے "خنجر سے حملے کی کوشش کی تھی"۔تاہم جلد ہی قابض حکام نے اپنا اعلان واپس لے لیا کیوں کہ "عرب خدوخال" رکھنے والا 19 سالہ نوجوان دراصل مغربی کنارے کے ایک یہودی بستی میں رہنے والا اسرائیلی آبادکار تھا۔ایک جانب قابض فوج کے ہاتھوں یہودی آبادکار کے قتل کی کارروائی اسرائیلی حلقوں کے لیے بڑا دھچکا ہے تو دوسری جانب یہ اسرائیلی فوجیوں کے ہاتھوں فلسطینی نوجوانوں کو موت کے گھاٹ اتارے جانے کی کارروائیوں کا پول بھی کھول رہی ہے جن کو عموما " قابض فوج کے اہل کاروں پر خنجر زنی کی کوشش" کے نام پر موت کی نیند سلا دیا جاتا ہے۔

اسرائیل پردباؤ ڈالنے کے لیے عالمی سطح پر مہمات شروع

رام اللہ ۔ یکم مئی (فکروخبر/ذرائع)اسرائیلی جیلوں میں اپنے حقوق کے لیے بہ طور احتجاج 17 اپریل سے بھوک ہڑتال کرنے والے اسیران کی تعداد 1600 تک پہنچ گئی ہے جب کہ 1500 اسیران کی بھوک ہڑتال کو آج 15 دن ہوگئے ہیں۔العربیہ  کے مطابق اسرائیل کی  مجد جیل میں قید مزید 100 فلسطینی اسیران بھوک ہڑتال کرنے والوں کی صف میں شامل ہوئے ہیں جس کے بعد بھوک ہڑتالی اسیران کی تعداد 1600 سے تجاوز کرگئی ہے۔فلسطینی محکمہ امور اسیران اور کلب برائے اسیران کی قائم کردہ مشترکہ فالو اپ کمیٹی کا کہنا دو روزقبل  مجد جیل کے مزید 100 اسیران نے اجتماعی بھوک ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔بھوک ہڑتال کرنے والے فلسطینی اسیران کی ہڑتال کا آج 15واں روز ہے۔ قیدیوں کے حوالے سے تشویش بھی لاحق ہے کیونکہ صہیونی جیلر اور تفتیش کار قیدیوں کو زدو کوب کرنے اور انہیں قید تنہائی کی سزائیں دینے کی کوشش کر رہے ہیں۔