dushwari

بھگوان کے نام پر گھپلہ: مندر ہی نہیں مگر پچیس لاکھ سرکاری فنڈ جاری (مزید ساحلی خبریں)

منگلور/بیلتنگڈی 22دسمبر (فکروخبرنیوز ) بھگوان کے نام پر گھپلہ بازی تو آئے دن سرخیوں میں رہتی ہیں،اسی طرح کاایک اور معاملہ یہاں ساحلی ضلع منگلور کے بیلتنگڈی علاقے میں سامنے آیا ہے ،یہاں ایک ایسے مندر کے نام پچیس لاکھ روپئے کا سرکاری فنڈجاری کیا گیا ہے ،جہاں مندر سرے سے موجود نہیں ہے۔ اطلاع کے مطابق بندار پنچایت حدو دکے اُروگالو دیہات کے پلی کلانامی مقام پر واقع لکشمی وینکٹ رمنا مندر اورانجنیا مندر کی حالت بڑی خستہ ہے ، اس کے تعمیراتی کاموں کے لئے لگ بھگ ایک کروڑ رروپیوں کا بجٹ لگ سکتا ہے ،لہٰذا حکومت کی جانب سے امدادی رقم جاری کی جائے ۔ اس طرح کی ایک درخواست حکومت کے نام دی گئی تھی۔

درخواست پر غوروخوص کرنے کے بعد حکومت نے مقامی رکنِ اسمبلی وسنت بنگیرا،یا کسی بھی مقامی شخص کی سفارش کے بغیر پچیس لاکھ روپئے جاری کردئے۔ اسی کے مطابق پہلے مرحلے کے مطابق دو لاکھ روپئے مندر کے نام سے چیک جار ی کیا گیا،مگر بعد میں جاکر پتہ چلا کہ مندر کے نام سے کسی بھی بینک میں کوئی اکاؤنٹ موجود نہیں ہے، اور چیک سے روپئے نہیں نکال پائے، بعد میں جاکر یہ بات مقامی لوگوں کے سامنے بھی آگئی ، اور سرکاری افسران کو بھی پتہ چل گیا کہ گمنام مندر کے نام پر حکومت سے فنڈحاصل کرنے کی کوشش کی گئی تھی۔ اب بنا تحقیق کے منظوری دینے پر سرکار کی ناکامی کہیں یا پھر کچھ اور ...؟


ایک ہی ٹریک پر دو مخالف سمت پر چل رہی ٹرینوں کو بروقت روکنے سے ایک بڑا حادثہ ٹل گیا 

منگلور 22؍ دسمبر (فکروخبرنیوز) اسٹیشن ماسٹر کی جانب سے بروقت اطلاع دینے کی وجہ سے ایک ٹریک پر چل رہی دو ٹرینوں کے تصادم کا ایک بڑا حادثہ ٹلنے کاواقعہ کل شام منظر پر آیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق ممبئی سی ٹی ایس سوپر فاسٹ ٹرین (منگلور ایکسپریس ) اور دہلی ، تری ویندر پورم (نظام الدین ) ایک ہی ٹریک پر مخالف سمت پر چل رہی تھیں ۔ ممبئی سی ایس ٹی ٹرین کل دوپہر منگلور اسٹیشن سے چلی اور نظام الدین ٹرین تھوکوٹو اسٹیشن سے نکلنے کے بعد ایک ہی راستے پر آمنے سامنے چل رہی تھیں۔ پاڈل اسٹیشن کی جانب سے ممبئی سی ایس ٹی کو گرین سگنل دیا گیا لیکن چھ ڈبوں کو بڑھائے جانے کا کام مکمل نہ ہونے کی وجہ سے اس کو دیا گیا سگنل رد کردیا گیا اور اس کی خبر ممبئی سی ایس ٹی کو نہیں دی گئی جس کی وجہ سے وہ آگے بڑھ گئی۔اسی وقت ٹاکور اسٹیشن کی جانب سے نظام الدین ٹرین کو بھی گرین سگنل دیا جاچکا تھا جس کی اطلاع پاڈل اسٹیشن افسران نے سٹی جنکشن کو نہیں دی تھی ۔ جب پاڈل اسٹیشن ماسٹر کو معلوم ہوا کہ مذکورہ دونوں ٹرین ایک ٹریک پر آمنے سامنے چل رہی ہیں تو اس نے فوری طور پر دونوں ٹرین ڈرائیوروں کو اس کی اطلاع کرتے ہوئے رکنے کے لیے کہا جس کی وجہ سے ایک بڑا حادثہ ٹل گیا ۔ 


ننانوے چوری کی واردات میں ملوث ملزم پولیس حراست میں 

شیموگہ 22؍ دسمبر (فکروخبرنیوز) گذشتہ تین سال سے شیموگہ اور داونگیرے اضلاع میں تقریباً ننانوے لوٹ کی وارداتوں کے اہم ملزم کو پولیس نے حراست میں لیتے ہوئے ایک کروڑ تیس لاکھ کا سونا برآمد کیے جانے کی خبر فکروخبر کو موصول ہوئی ہے۔ اطلاعات کے مطابق شیموگہ پولیس نے منجپا عرف ہالو منجا مقیم ہوسا ہلی کو اسی ماہ لوٹ کی وارداتوں میں ملوث ہونے کے الزام میں حراست میں لیا تھا ۔ پولیس نے بتایا کہ مذکورہ شخص نے قریب ننانوے چوری کی وارداتیں انجام دی ہیں اور لاکھوں کا مال پر ہاتھ صاف کیا ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق 4.133کلو سونا جس کی قیمت ایک کروڑ تیس لاکھ روپئے بتائی جارہی ہے اور چار کلو چاندی جس کی قیمت ایک لاکھ اکسٹھ ہزار ہے ضبط کرلیے گیا گیا ہے۔ ایس پی روی ڈی چناناور نے کہا تحقیقات کے دوران پتہ چلا کہ ملزم نے سال 2012سے کئی وارداتو ں میں ملوث ہے ۔ 31؍ اکتوبر کو منجپا نے درگی گڈی مین روڈ پر واقع پدما جویلرس کی چھت کو سوراخ بناکر اس میں موجود 2.48لاکھ سونے کی مالیت پر ہاتھ صاف کیا تھا ۔پولیس نے اس واردات کی ملزمین کو حراست میں لینے کے لیے ایک خصوصی ٹیم تشکیل دی تھی جو منجپا کو حراست میں لینے میں کامیاب ہوگئی ۔ ایس پی نے پولیس کی اس ٹیم کو دو لاکھ روپئے بطور انعام دینے کا بھی اعلان کیا ہے۔ 


ساحل سمندر پر بم دھماکے سے ایک شخص ہلاک

علاقے میں کئی بم چھپائے جانے کا شبہ 

کاسرگوڈ 22؍ دسمبر (فکروخبرنیوز) پڑوسی ریاست کیرلا کے دھرمادوم کے قریب واقع ایک پلاٹ میں ایک بم دھماکہ سے ایک شخص کے ہلاک ہونے کی واردات پیش آئی ہے۔ مہلوک شخص کی شناخت پتیانڈی سنجیون (47) کی حیثیت سے کرلی گئی ہے۔ عینی شاہدین کے حوالے سے پولیس نے کہا کہ مذکورہ شخص گرے ہوئے ناریل اور ناریل کے پتے جمع کرنے کے لیے دھرمادون علاقے کے قریب واقع ایک پلاٹ میں گیا ہوا تھا ۔ اس دوران لوگوں نے اس کو خون میں لت پت ساحل پر دوڑتے ہوئے دیکھا جس کے کچھ ہی دیر بعد وہ گرا اور اس نے اپنی آخری سانس لی ۔ پولیس ذرائع کے مطابق مذکورہ علاقے بھارتیہ جنتا پارٹی اور آر ایس ایس کا گڑھ سمجھا جاتا ہے ۔ مذکورہ دھماکہ کی وجہ سے پولیس نے چھاپہ ماردیا ۔ بتایا جارہا ہے کہ وہاں سے کوئی بھی ہتھیار برآمد نہیں کیا گیا ہے۔ کیمونسٹ پارٹی آف انڈیا کے ضلع سکریٹری پی جیا راجن نے الزام لگایا ہے کہ آر ایس ایس نے اس علاقے میں بم چھپاکر رکھے ہوئے ہیں ۔ اس نے الزام لگایا ہے کہ دھماکہ کے بعد ہوسکتا ہے کہ آر ایس ایس نے وہاں سے بم نکال دئیے ہوں۔ 


شادی کے موقع پر قیمتی اشیاء لوٹنے والا جوڑا پولیس حراست میں 

اڈپی 22؍ دسمبر (فکروخبرنیوز) ہری ایڈکا اور دیگر علاقوں سے شادی بیاہ کے موقع پر قیمتی اشیاء لے کر فرار ہونے والے ایک جوڑے کو پولیس نے حراست میں لیا ہے۔ گرفتار شدہ افراد کی شناخت ایس آر دلیپ (38) اور اس کی بیوی ریواتی (28) مقیم جیا نگر ، شیموگہ کی حیثیت سے کرلی گئی ہے۔تفصیلات کے مطابق مذکورہ جوڑا شادی بیاہ کے موقع پر شادی ہال میں داخل ہوکر سونے کے زیورات سمیت نقدی اور دیگر قیمتی اشیاء لے کر فرار ہوا کرتا تھا۔ پردیپ اور ریواتی نے اے ٹی ایم کارڈس بھی اپنے ساتھ لے گئے اور نقدی نکالنے کی بھی کوشش کی تھی ۔ پولیس نے سونا ، چاندی ، نقدی اور ایک موٹر سائیکل کے علاوہ اے ٹی ایم کارڈ س ضبط کرلیے ہیں ۔ ضبط شدہ اشیاء کی قیمت بارہ لاکھ روپئے بتائی جارہی ہے۔ ذرائع کے مطابق اس جوڑے پر الزام ہے کہ پچھلے تین چار سال سے اس کام میں ملوث ہے۔ ایک شادی کے دوران لوگوں کو اس جوڑے پر شک ہونے کی وجہ سے اس کا اسکیج بنایا ۔ اس اسکیج سے مشابہت رکھنے والا ایک جوڑا ہری ایڈکا بس اڈے کے قریب موجود تھا۔ اس دوران ان سے کئی سوالات کیے جس کے بعد مذکورہ خلاصہ سامنے آیا ہے۔ ملزمین کو عدالت میں پیش کرنے کے بعد پندرہ دنوں تک کے لیے عدالتی تحویل میں دے دیا گیا ہے۔ 

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES