Live Madinah

makkah1

dushwari

شام : دمشق میں دھماکے ، 18 افراد ہلاک اور 15 زخمی

شام 02؍ جولائی 2017(فکروخبر/ذرائع)شام میں انسانی حقوق کے مانیٹرنگ گروپ کے مطابق اتوار کی صبح دارالحکومت دمشق کے مشرقی حصّے میں التحریر اسکوائر پر خود کش کے نتیجے میں 18 افراد ہلاک اور 15 زخمی ہو گئے۔گروپ کے ڈائریکٹر رامی عبدالرحمن نے فرانسیسی خبر رساں ایجنسی کو بتایا کہ ہلاک ہونے والوں میں شہری اور فوجی اہل کار شامل ہیں جب کہ کم از کم 15 افراد زخمی بھی ہوئے۔شام کے سرکاری ٹی وی کے مطابق متعلقہ اداروں کی جانب سے گولہ بارود سے بھری 3 گاڑیوں کا تعاقب کیا جا رہا تھا کہ اس دوران ایک دہش گرد نے خود کو دھماکے سے اڑا دیا۔

تاہم بعد ازاں سرکاری خبر رساں ایجنسی (سانا) نے دمشق پولیس کے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ "دہشت گردوں نے بیک وقت تین کار دھماکے کیے جن میں دو ہوائی اڈے کے راستے پر اور تیسرا التحریر اسکوائر کے علاقے میں ہوا"۔ ذرائع نے تصدیق کی کہ دہشت گرد دھماکوں کے نتیجے میں متعدد افراد ہلاک و زخمی ہوئے اور جائے حادثہ پر مادی نقصان بھی ہوا۔فرانسیسی خبر رساں ایجنسی نے التحریر اسکوائر کے ایک رہائشی محمد تیناوی کے حوالے سے بتایا کہ اتوار کی صبح چھ بجے کے قریب فائرنگ کی آوازیں سنائی دی گئیں ، اس کے بعد ایک زور دار دھماکے کی آواز آئی جس سے علاقے کے گھروں کے شیشے ٹوٹ گئے۔رواں برس مارچ میں دمشق میں دو خودکش دھماکوں کے نتیجے میں 32 افراد جان سے ہاتھ دھو بیٹھے تھے۔ کسی بھی جانب سے اس کارروائی کی ذمے داری قبول نہیں کی گئی۔ اس کے کچھ روز بعد دمشق کے پرانے شہر کے ایک علاقے میں میں دو خونی دھماکے ہوئے جن کے نتیجے میں 74 افراد مارے گئے۔ ان دھماکوں کی ذمے داری تحریر الشام نامی تنظیم نے قبول کی تھی۔