dushwari

ابو ظہبی میزائل کے حوالے سے حوثیوں کے دعوے کا پول کْھل گیا

صنعاء :04؍ڈسمبر2017(فکروخبر/ذرائع)یمن میں حوثی باغیوں کے حربی ذرائع ابلاغ نے ایک میزائل داغے جانے کی وڈیو ریکارڈنگ جاری کی ہے جس کے بارے میں حوثیوں کا دعوی ہے کہ اس کے ذریعے متحدہ عرب امارات کے دارالحکومت ابوظبی کو نشانہ بنایا گیا۔امارات کی جانب سے تو پہلے ہی اس دعوے کی تردید کر دی گئی تھی اور اب وڈیو کے مناظر نے بھی حوثی ملیشیا کے جھوٹ کا پول کھول دیا ہے۔ کیمرے کی آنکھ میں محفوظ ہونے والے منظر سے واضح طور پر نظر آ رہا ہے کہ میزائل کے فضا میں بلند ہونے کے دوران وہ دو حصوں میں تقسیم ہو کر یمنی اراضی کے اندر ہی گر گیا۔

امارات میں ہنگامی حالات اور بحرانات سے نمٹنے والی نیشنل اتھارٹی نے یمن میں حوثیوں باغیوں کے اس دعوے کو جھوٹا قرار دیا جس میں کہا گیا تھا کہ اتوار کے روز متحدہ عرب امارات کی فضائی حدود کی جانب ایک میزائل داغا گیا۔مذکورہ اتھارٹی نے اپنے ایک بیان میں زور دے کر کہا کہ متحدہ عرب امارات کے پاس فضائی دفاعی نظام ہے جو کسی بھی نوعیت کے خطرے سے نمٹنے کی قدرت رکھتا ہے۔اتھارٹی کے مطابق براکہ ری ایکٹر کا منصوبہ محفوظ ہے اور اْن تمام تر سکیورٹی اقدامات سے لیس ہے جو اس نوعیت کے ضخیم قومی منصوبوں کے لیے مطلوب ہوتے ہیں۔اتھارٹی نے اماراتی شہریوں اور غیر ملکی مقیمین کو اطمینان دلایا کہ ریاست کی فضائیں پر امن ہیں اور متحدہ عرب امارات امن و امان کے ساتھ باقی رہے گا۔