dushwari

سعودی عرب کے اسرائیل کے ساتھ کسی قسم کے تعلقات نہیں،سعودی وزیر خارجہ کی تردید

روم:03؍ڈسمبر2017(فکروخبر/ذرائع)سعودی عرب کے وزیرخارجہ عادل الجبیر نے واضح کیا ہے کہ ہمارے ملک کے صہیونی ریاست کے ساتھ کسی قسم کے تعلقات قائم نہیں ہیں۔ فلسطینی میڈیا رپورٹس کے مطابق اٹلی کے دورے کے دوران روم میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں عادل الجبیر نے کہا کہ تل ابیب اور الریاض کے درمیان کسی قسم کے تعلقات نہیں۔عادل الجبیر کی طرف سے یہ ترید ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب دوسری جانب یہ خبریں عام ہیں کہ سعودی عرب نے اسرائیل کے ساتھ خفیہ تعلقات استوار کررکھے ہیں۔

قبل ازیں الجبیر نے اپنے اطالوی ہم منصب سے بند کمرے میں طویل ملاقات کی۔ اس کے علاوہ انہوں نے روم میں روسی وزیرخارجہ سیرگی لافروف سے بھی ملاقات کی۔مغربی اخبارات نے اپنی رپورٹس میں بتایا ہے کہ سعودی عرب کے شہزادے اسرائیل کے خفیہ دورے کرتے اور صہیونی حکام کے ساتھ ملاقاتیں کرتے رہے ہیں۔ ان ملاقاتوں کا مقصد دونوں ملکوں کے درمیان باقاعدہ سفارتی تعلقات استوار کرنے کی راہ ہموار کرنا ہے۔اسرائیلی حکومت کے ایک ذرائع نے اپنی شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پراے ایف پی کو بتایا ہے کہ گذشتہ ستمبر میں سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے اسرائیل کا خفیہ دورہ کیا تھا۔اس کے علاوہ سعودی کابینہ کے سابق مشیر میجر جنرل انور عشقی بھی حال ہی میں تل ابیب کا خفیہ دورہ کرچکے ہیں۔ ان دوروں کا مقصد عبرانی ریاست اور سعودی عرب کے درمیان سفارتی تعلقات استوار کرنے کی راہ ہموار کرنا ہے۔دوسری طرف اسرائیلی حکومت کے ایک ذرائع کا کہنا ہے کہ چند ہفتے قبل سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان خفیہ دورے پر اسرائیلی آئے تھے۔