dushwari

یورپ میں مسلمانوں کی تعداد بڑھ رہی ہے،رپورٹ امریکی تھنک ٹینک

2050میں مسلمانوں کی آبادی آج کی نسبت دگنی یعنی11اعشاریہ 2فیصد ہوجائے گی

واشنگٹن:30؍نومبر2017(فکروخبر/ذرائع)یورپ بھر میں مسلمانوں کی تعداد میں اضا فہ ہورہا ہے۔ 2050 تک مسلمانوں کی تعداد یورپ کی کل آبادی کا گیارہ فیصد ہونے کا امکان ہے ۔امریکی تھنک ٹینک کی یورپ میں مسلمانوں کی بڑھتی ہوئی آبادی سے متعلق رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ فی الحال مسلمان یورپ کی کل آبادی کا 5فیصد ہیں اور پیو ریسرچ سینٹر نے امیگریشن کی 3 مختلف شرح کے اعتبار سے اندازے پیش کئے ہیں ۔

پہلی صورت کے مطابق اگر قانونی اور غیر قانونی تارکین وطن کی آمد بند کردی جائے تب بھی 30 یورپی ممالک میں مسلمان آبادی کا7 اعشاریہ 4 فی صد تک ہوجائیں گے ۔اگرامیگریشن پناہ گزینوں کے بحران سے پہلے کی سطح پرآجائے تو 2050 میں مسلمانوں کی آبادی آج کی نسبت دگنی یعنی11اعشاریہ 2فیصد ہوجائے گی۔تیسری صورت میں اگر پناہ گزینوں کی اسی طرح آمد جاری رہی تو مسلمان یورپ کی مجموعی آبادی کا 14فی صد ہوں گے تاہم اس کا امکان کم ہے۔