dushwari

دستور بچاؤ ۔ دیش بچاؤ

دلت۔مسلم پر بھکتوں کے مظالم کی مذمت۔ گول میز کانفرنس سے غدر کا خطاب

حیدرآباد۔ 11؍جنوری2018(فکروخبر/ذرائع) انقلابی شاعر غدر نے کہا کہ دیش کی حفاظت کے لئے دستور کا تحفظ ضروری ہے اور دستور کے تمام دفعات پر عمل آوری حکومت کی ذمہ داری ہے۔ وہ آج میڈیا پلس آڈیٹوریم میں ایس سی ایس ٹی‘ بی سی اینڈ مسلمس فرنٹ کے زیر اہتمام دلتوں اور مسلمانوں پر بھکتوں کے مظالم کے موضوع پر ایک راؤنڈ ٹیبل کانفرنس سے مخاطب تھے۔ جناب ظہیرالدین علی خاں منیجنگ ایڈیٹر سیاست‘ جناب عثمان شہید ایڈوکیٹ، طارق قادری ایڈوکیٹ، جیہ وندنا، حسین شہید، مجاہد ہاشمی، شیوچرن، سائی کرشنا شرکاء میں شامل تھے۔ جناب ثناء اللہ خان صدر فرنٹ نے خیر مقدم کیا اور کہا کہ اس کانفرنس کا مقصد عوام تصور بیدار کرنا ہے۔

انقلابی شاعر غدر نے کہا کہ دستور ہند بھی سب کے لئے مقدس ہے کیوں کہ اس میں بنیادی حقوق کے تحفظ کی ضمانت دی گئی، اظہار خیال کی آزادی کا حق دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا ہ دستور سے متعلق گاؤں گاؤں شہر شہر شعور کی بیداری ناگزیر ہے۔ ’’غدر‘‘ نے کہا کہ مسلمانوں نے سات سو برس حکومت کی مگر نہ تو کسی کو جبری طور پر مسلمان کیا نہ ہی اس ملک کو اسلامی مملکت میں تبدیل کیا اس کے برعکس بی جے پی نے اپنے ساڑھے تین سالہ دور اقتدار میں ملک کو ہندو راشٹرا بنانے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی۔ اس کوشش اور سازش کے خلاف متحدہ جدوجہد کی ضرورت ہے۔ انہوں نے مسلمانوں سے بھی اپیل کی کہ وہ دستور ہند کا مطالعہ کریں اور اپنے حقوق سے متعلق جانکاری حاصل کریں۔ اس کے لئے جائز طریقہ سے مقابلہ کریں۔ جناب عثمان شہید نے کہا ہ ہندوستان لگ بھگ ہندو راشٹرا بن گیا ہے۔ مقررین نے دلتوں اور مسلمانوں پر بھکتوں کے مظالم کی مذمت کی اور اس یقین کا اظہار کیا کہ ظلم کی ٹہنی ٹوٹ جائے گی۔

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES