dushwari

مورینا میں پنچایت کا شراب بندی کے لئے اٹھایا گیا قدم ,شراب پینے پر لگے گا بھاری جرمانہ

مورینا:19؍ستمبر2017(فکروخبر /ذرائع)مدھیہ پردیش کے مورینا ضلع میں تقریباً آدھا درجن گاؤوں کی مہا پنچایتوں نے شراب پینے اور فروخت کرنے والوں پر جرمانہ عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔پورسا ڈیولپمنٹ بلاک کے آدھا درجن گاؤوں میں کل ہوئی مہاپنچایت میں فیصلہ کیا گیا کہ گاؤں کا کوئی بھی شخص نہ شراب پئے گا اور نہ فروخت کرے گا۔ اگر شراب پیتے ہوئے کوئی پکڑا جاتا ہے تو پہلی بار اسے ایک ہزار اور دوسری بار 2100 روپے جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

پنچایت میں کہا گیا ہے کہ جرمانہ نہ دینے پر اسے گاؤں کی گلیوں کی صفائی کرنی ہوگی اگر وہ اتنے پر بھی نہیں مانتا ہے تو اسے سماج سے باہرکر دیا جائے گا۔ذرائع نے بتایا کہ پروسا دیولپمنٹ بلاک کے گرام پدو، گڑیا رائے پور، گڈے کا پورا، واہیر پورا، رام بکس کا پورا، رمگڈھا اور دھرم پورا گاؤوں نے اس مہا پنچایت کا انعقاد کیا تھا۔ مہا پنچایت میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ جو شخص شراب پینے والے کی اطلاع دے گا،اگر وہ مرد ہے تو اسے پانچ سو روپے اور خاتون ہے تو اسے 600 روپے کا انعام دیا جائے گا۔پنچایت نے طے کیا ہے کہ جرمانے کی رقم گاؤں کے ترقیاتی کاموں میں خرچ کی جائے گی۔

Urdu-Arabic-Keybaord11

ISLAMIC-MESSAGES